IMG-LOGO


راچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر اطلاعات و محنت سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ سیسی کے تحت چلنے والی تمام اسپتالوں اور ڈسپنسریوں میں محنت کشوں اور مزدوروں کو فوری طبی امداد اور ادویات کی مفت فراہمی ہماری اولین ترجیع ہے۔ شوشل سیکورٹی اسپتال لانڈھی میں مریضوں کو فراہم کرنے والی سہولیات کو مزید بہتر بنایا جائے اور اوپی ڈی و داخل مریضوں کو زیادہ سے زیادہ سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ یہ بات انہوں نے جمعرات کے روز اچانک لانڈھی میں قائم شوشل سیکورٹی اسپتال کے دورے کے موقع پر ڈپٹی میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر ذوالفقار اور دیگرڈاکٹروں سے کہا۔ اس موقع پر صوبائی وزیر کے ہمراہ سیسی کی گورننگ باڈی کے رکن محمد خان ابڑو اور دیگر بھی موجود تھے۔ صوبائی وزیر سعید غنی نے اسپتال میں او پی ڈی، ای این ٹی، آئی اور دیگر شعبہ جات کی او پی ڈی کا دورہ کیا.صوبائی وزیر نے ان شعبہ جات میں مریضوں سے علاج معالجہ اور انہیں فراہم کی جائے والی ادویات سے متعلق معلومات حاصل کی.سعید غنی نے آئی سی یو، اسپتال کے سرجیکل اور میڈیکل وارڈز کا بھی دورہ کیا جبکہ وہ اسپتال میں زیر علاج اور او پی ڈی کے مریضوں کو ڈاکٹرز کی جانب سے تجویز کردہ ادویات کی فراہمی کے کاؤنٹر بھی پہنچ گئے. صوبائی وزیر نے اسپتال میں زیر علاج مریضوں کو فراہم کئے جانے والے کھانے کی تیاری کے کچن کا بھی دورہ کیا اور وہاں تیار کھانے کو خود کھا کر چیک کیا. انہوں نے کچن کے انچارج اور دیگر ملازمین کو ہدایات دی کہ مریضوں کے کھانے پر کسی قسم کی لاپرواہی نہ بڑتی جائے۔سعید غنی نے اسپتال میں ادویات کے اسٹاک گودام کا بھی دورہ کیا اور وہاں ادویات کی کوالٹی، ان کی معیاد اور رجسٹر کے مطابق ادویات کے اسٹاک کی جانچ پڑتال کی. اس موقع پر انہوں نے ادویات کی فراہمی کے کاؤنٹر اور گودام میں موجود ادویات کی صفائی ستھرائی پر خصوصی توجہ دینے کی بھی ہدایات دی۔ اس موقع پر صوبائی وزیر سعید غنی سے اسپتال میں موجود مزدور رہنماؤں نے بھی ملاقات کی اور ان کو درپیش مشکلات اور ان کی شکایات بھی سنی۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ اسپتال میں زیر علاج اور او پی ڈی کے مریضوں کو تمام تر طبی سہولیات باآسانی دستیاب ہوں.۔ سعید غنی نے کہا کہ  اسپتال کے دورے کا مقصد یہاں علاج معالجہ کی سہولیات کا جائزہ لینا اور یہاں موجود ادویات کی کوالٹی کو چیک کرنا تھا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے یہاں او پی ڈی اور مختلف ڈپارٹمنٹ میں جاکر مریضوں سے خود علاج معالجہ کے حوالے سے معلومات لی ہیں اور یہاں پر موجود مریضوں نے اطمینان کا اظہار کیا ہے البتہ کچھ شعبہء جات میں اسپیشلسٹ ڈاکٹرز کی کمی کا سامنا ہے اس حوالے سے بھی اقدامات کئے جارہے ہیں۔ سعید غنی نے کہا کہ ادویات کی فراہمی کے حوالے سے بھی کسی قسم کی کوئی خاص شکایات انہیں نہیں ملی ہیں جبکہ او پی ڈی اور داخل مریضوں نے بھی ادویات کی فراہمی پر بھرپور اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ادویات کی کوالٹی بھی بہتر ہے اور ماضی کے مقابلے اب کوئی بھی دوا غیر رجسٹرڈ کمپنی کی نہیں ہے، جو خوش آئند ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ ہم ادویات کی کوالٹی کو مزید بہتر بنانے کے لئے بھی اقدامات کررہے ہیں اور ہماری بھرپور کوشش ہے کہ محنت کشوں اور ان کے اہلخانہ جو کہ سیسی سے رجسٹرڈ ہیں ان کو مکمل طبی سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اسپتال میں ڈاکٹروں بالخصوص کنسلٹینٹ کی کمی کو بھی پورا کرنے کے لئے قانون کے مطابق اقدامات کررہے ہیں جبکہ مریضوں کو کسی قسم کی پریشانی سے بچانے اور انہیں طبی سہولیات کی بروقت فراہمی کے لئے تمام اقدامات بروئے کار لائے جائیں گے۔


جاری کردہ: زبیر میمن، میڈیا کنسلٹینٹ، وزیر اطلاعات و محنت سندھ سعید غنی، فون 03333788079

فوٹو کیپشن:
 وزیر اطلاعات و محنت سندھ سعید غنی لانڈھی میں قائم شوشل سیکورٹی اسپتال کے مختلف شعبہء جات کادورہ کررہے ہیں اور وہاں موجود مریضوں سے علاج معالجہ کے حوالے سے تفصیلات طلب کررہے ہیں۔ اس موقع پر سیسی کی گورننگ باڈی کے رکن محمد خان ابڑو،  ڈپٹی میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر ذوالفقار اور دیگر بھی ان کے ہمراہ موجود ہیں۔


Handouts

CONDOLENCE

06-03-2020

CORONAVIRUS

02-03-2020

CORRIGENDUM

06-01-2020

CHARGE ASSUMPTION

28-11-2019

PAC DIRECTIVES.

29-10-2019